تازہ ترین

Post Top Ad

پیر، 4 اپریل، 2022

اترپردیش :بلڈوزر کے خوف سے ہتھیار ڈالنے کی قطار میں لگے بدمعاش ، جونپور میں 50 ہزار انعامی بدمعاش کی خود سپردگی!

جونپور۔اسماعیل عمران ۔(یو این اے نیوز 4مارچ 2022 پیر کی صبح 50 ہزار انعامی بدمعاش روی تیواری نے جونپور ایس  آفس میں خودسپردگی کی۔  انہوں نے کہا کہ انتظامیہ کا بلڈوزر کسی بھی وقت میرے گھر پر دھاوا بول دیتا۔


 

 اتر پردیش میں یوگی آدتیہ ناتھ کی حکومت کی واپسی کے بعد سے بعدماش بلڈوزر کے خوف سے خود کو پولیس کے حوالے کر رہے ہیں۔  کچھ دن پہلے مرزا پور کے بعد اب پیر کو جونپور ضلع میں یہ منظر سامنے  آیا۔  50 ہزار انعامی بدمعاش روی تیواری نے ایس پی آفس میں سرنڈر کر دیا۔  وہ ڈکیتی اور قتل کی متعدد وارداتوں میں کئی ماہ سے مفرور تھا۔


 اے ایس پی سٹی ڈاکٹر سنجے کمار کے سامنے سرنڈر کرتے ہوئے روی تیواری نے کہا کہ سلطان پور پولیس نے مجھ پر 50 ہزار انعام کا اعلان کیا ہے۔  میرے خلاف 17-18 مقدمات درج ہیں۔  مجھے انکاؤنٹر کا خوف تھا  نیز یوگی آدتیہ ناتھ حکومت کا بلڈوزر کسی بھی وقت میرے گھر پر چل سکتا ہے۔  چنانچہ میں نے ایس پی جونپور کے سامنے ہتھیار ڈالنے کا ارادہ کیا۔


 مرزا پور میں سات مجرم ہاتھوں میں پلے کارڈ لے کر تھانے پہنچ گئے۔

پولیس نے اسے گرفتار کر کے چالان عدالت میں بھیج دیا۔  اگر آپ دیکھیں تو پورے یوپی میں پچھلے 15-20 دنوں میں 50 سے زیادہ بدمعاشوں نے نہ صرف خودسپردگی کی ہے بلکہ جرائم سے دور رہنے کا عزم بھی کیا ہے۔


 30 مارچ کو مرزا پور ضلع میں سات ہسٹری شیٹرز نے ہتھیار ڈال دیئے۔  تمام بدمعاش مزید جرم نہ کرنے اور بہتری لانے کا عہد کرتے ہوئے شہر کوتوالی پہنچے تھے۔  تمام ہسٹری شیٹرز نے ہاتھوں میں پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے۔  جس پر لکھا تھا کہ اب ہم جرم نہیں کریں گے۔  اب ہمیں اصلاح کا موقع دیں۔

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں

Post Top Ad