تازہ ترین

Post Top Ad

بدھ، 25 نومبر، 2020

پہلا مسلم چہرہ صغیر احمدایڈو وکیٹ(علیگ) آگرہ حلقہ سے ایم،ایل،سی،کے انتخابی میدان میں

مین پوری۔حافظ محمد ذاکر ۔(یو این اے نیوز 25 نومبر 2020)آگرہ حلقہ سے ایم،ایل، سی،کے انتخابات میں قسمت  آزمائی کر رہےفیروزآباد کی سر زمین سے صغیر احمدایڈووکیٹ(علیگ)سے موبائل پر ہوئی گفتگو کے دوران صغیر احمد ایڈ ووکیٹ نے بتایا کہ ایم،ایل،سی،کے اس انتخابی میدان میں کبھی کسی مسلم نے قسمت آزمائی  نہیں کی ہے،میں پہلی مرتبہ سبھی کی دعائیں لیکر ا س میدان میں ہوں،اور مجھے امید ہے کہ لوگوں



کی حمایت ہمکو اس انتخابات میں کامیابی عطا کر یگی،انہو نے کہا آگرہ کے تحت آنے والے سبھی اضلاع  میں مسلم امیدواروں نےاسمبلی،پارلیمانی،وغیرہ


انتخابات میں حصہ لیا ہے،مگر اس انتخاب میں کبھی کوئی مسلم نے ہمت نہیں دکھائی،کیونکہ اس انتخاب کی نوعیت ہی اور انتخابوں جدا ہو تی ہے،اس انتخاب میں صرف تعلیم یافتہ ہی لوگ اپنی حق رائے دہی کا استعمال کرتے


ہیں،اور مجھے امید ہے کہ اس مرتبہ ہم کامیابی سے ہمکنار ہو نگے۔تعلیم یافتہ ہر ایک شخص خوب واقف ہو چکا ہے کہ اس سیٹ پر بھی وہ ہی لوگ قبضہ


کرنا چاہتے ہیں جو اقتدار میں ہیں یا اقتدار میں رہ چکے ہیں، یہ لوگ نہیں چاہتے کہ کوئی اور اس سیٹ پر اپنی فتح کا پر چم لہرائے،مگر اس مرتبہ یہ


سیٹ ضرور تبدیل ہو گی،کیونکہ لوگوں نے اس سیٹ پر امیدوار بدلنے کا ارادہ کر لیا ہے، انہو نے کہا کہ کچھ لوگ اپنے سوا کسی اور کو کسی بھی محاذ پر


کامیاب ہوتے دیکھنا پسند نہیں کرتے۔وہ لوگ چاہتے ہیں پردھان سے لیکر پردھان منتری تک کہ تمام عہدے صرف ہمارے خاندان،ہماری ذات کے لوگوں تک ہی محفوظ رہیں۔ انہو نے کہا کہ کہ اگر مجھے کامیابی حاصل ہوئی تو میں اپنا تمام تر وقت

لوگوں کی خدمت کے لئے وقف کر دونگا۔

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں

Post Top Ad